بواعث افتخار و اعزازات

اعزازات

تنظیم المدارس اہل سنت کے قیام میں شرکت:

جامعہ رضویہ ضیاء العلوم کے بانیان نے تنظیم المدارس اہل سنت کے قیام میں نہایت اہم کردار ادا کیا ہے۔ ابتداءً تنظیم المدارس صوبہ پنجاب، سرحد (خیبر پختونخواہ) اور آزاد کشمیر کا ہیڈ آفس جامعہ کے کیمپس میں ہی قائم کیا گیا تھا۔ جامعہ رضویہ ضیاء العلوم کے مہتمم حضرت شیخ الحدیث مولانا سید حسین الدین شاہ صاحب دامت برکاتھم العالیہ نے مختلف صوبوں کا دورہ کیا اور وہاں کے مدارس کو تنظیم المدارس اہل سنت کے ساتھ الحاق کرنے پر آمادہ کیا۔

ذیلی مدارس و جامعات کا قیام:

وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ جامعہ نے راولپنڈی اسلام آباد  اور قرب و جوار میں ذیلی اداروں کا قیام کیا ، جن میں درجنوں ادارے اب خود کفیل ھو کر فوقانی درجات پر ترقی پا چکے ھیں ۔ علاوہ ازیں ھمدردان ملت نے اپنے قائم کردہ مدارس کا  الحاق بھی جامعہ سے کروایا تاکہ علمی و تربیتی لحاظ سے ان کی کارگذاری بہتر بنائی جا سکے ۔ اس طرح الحاق شدہ مدارس میں بھی اضافہ ہوتا گیا۔ اس وقت پاکستان کے سینکڑوں مدارس جامعہ رضویہ ضیاء العلوم کے ساتھ اپنا تعلیمی و تربیتی الحاق رکھتے ہیں۔ جامعہ کے فارغ التحصیل علماء پوری امت مسلمہ میں علم کا نور بانٹ رہے ہیں

بیرونی ممالک میں مدارس کا قیام:

جامعہ رضویہ ضیاء العلوم دنیائے اسلام کا ایک عظیم تعلیمی ادارہ ہے جونصف صدی سے زائد عرصے سے دنیا بھر میں دینی خدمات انجام دے رہا ہے۔ الحمد للہ العظیم  ضیاء العلوم سے نکلنے والا علم کا نور صرف پاکستان تک محدود نہیں ہے بلکہ دیگر ممالک مثلا ہالینڈ، جرمنی، انگلینڈ، سکاٹ لینڈ ، امریکہ اور جنوبی افریقہ وغیرہ میں بھی پھیلا ہوا ہے۔ اس کے علماء و فاضلین اپنے مادر علمی کا فیض پوری دنیا کے مسلمانوں میں بانٹ رہے ہیں

دینی اور ملّی تحریکات:

جامعہ نے بہت سی اسلامی اور ملّی تحریکات میں شرکت کی ہے۔

ان میں سے چند ایک درج ذیل ہیں:

  • تحریک ختم نبوت میں شرکت
  • حکومتی سطح پر اسلامی امور کا حل
  • علماء و مشائخ کانفرنسوں کا انعقاد و شمولیت
  • نیز ملک بھر کی حکومتی اور نجی مساجد میں خطباء، ائمہ اور مؤذنین کی تعیین

شعبہ جات

جامعہ رضویہ میں دو قسم کے شعبہ جات ہیں:
شعبہ تعلیم و تربیت

شعبہ انتظامیہ

شعبہ تعلیم

  • شعبہ تعلیم کے مزید ذیلی شعبہ جات ہیں:
    • شعبہ حفظ و ناظرہ
    • شعبہ تجوید و قرأۃ
    • شعبہ درس نظامی (سال اول تا سال سابعہ)
    • شعبہ دورہ حدیث و تفسیر القرآن
    • تخصص فی الفقہ
    • شعبہ جدید عصری تعلیم
    • شعبہ افتاء نویسی
    • شعبہ تحقیق و تصنیف
    • شعبہ دعوت و ارشاد
    • شعبہ امتحانات
    • سنٹرل لائبریری (المکتبۃ المرکزیہ)

شعبہ انتظامیہ

  • انتظامیہ کے ذیلی شعبے
    • شعبہ داخلی امور
    • داخلہ جات
    • شعبہ معاونت و مالیات
    • شعبہ ٹرانسپورٹ
    • شعبہ طعام
    • شعبہ خارجی امور